Sher o Shayari in Urdu Sad || Ghamzada Shero Shayari

Sher o Shayari in Urdu Sad || Ghamzada Shero Shayari

Everyone looks for romantic poetry and other beautiful things for their happiness. But this love is something that will make you happy when you are sad. Therefore, if you also want to read Sher o Shayari in Urdu Sad then below we have mentioned the Ghamzada Shero Shayari. Scroll down to find out.

 

Get Likes, Follwers and Share Click Now and Make AccountGetlike
Sher o Shayari in Urdu Sad

سپرد خاک میرا اک اک خط نہ کرے،
وہ بدگمانیوں میں فیصلے غلط نہ کرے،

supurd khaak mera ik ik khat nah kere ,
woh bdgmanyon mein faislay ghalat nah kere ,

 

سلجھ بھی سگتا ھے جھگڑا اسے کہو کہ ابھی،
جدائی کہ کسی کاغذ پر دستخط نہ کرے

sulajh bhi sangna he jhagra usay kaho ke abhi ,
judai ke kisi kaghaz par dastakhat nah kere

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad

یوں بھی ہو سکتا ہے کوئی یک دم اچھا لگ جائے
بات کوئی بھی نہ ہو اور دل میں تماشا لگ جائے

yun bhi ho sakta hai koi yak dam acha lag jaye
baat koi bhi nah ho aur dil mein tamasha lag jaye

 

پہلے کاٹ لیجیےاِک چِلہّ وفا کا
پِھر شوق سے اُلفت کی تبلیغ کیجیے

pehlay kaat lijiye ik chilla wafa ka
pِhr shoq se ulfate ki tableegh kiijiye

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad

مجھ کو سکھاؤ کوئی آداب اداسی کے
غم سے بھر جاؤں تو ہنسنے لگتا ہوں

mujh ko sikhao koi aadaab udasi ke
gham se bhar jaoon to hansnay lagta hon

 

یہ جو ہر بات پر کُچھ سوچ کے ہنس دیتا ہے,
نہ جانے اس شخص نے کس طور کا غم دیکھا ہے

yeh jo har baat par kُchh soch ke hans deta hai ,
nah jane is shakhs ne kis tor ka gham dekha hai

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad

جی میں آتا ہے کہ ! اِک بار تو چیخوں ایسے
‏ساری دُنیا کو خبر ہو کہ ! تُجھے کھویا ہے

jee mein aata hai ke! ik baar to cheekhon aisay
sari duniya ko khabar ho ke! tujhe khoya hai

 

سانسوں کے سلسلے کو نہ دو زندگی کا نام
جینے کے باوجود بھی کچھ لوگ مر جاتے ہیں

saanson ke silsilay ko nah do zindagi ka naam
jeeney ke bawajood bhi kuch log mar jatay hain

 

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad

پاس الفت نہ سہی، میرا بھرم تو رکھ لے۔۔۔۔۔
میں نے لوگوں کو ، تجھے اپنا بتا رکھا ہے

paas ulfat nah sahi, mera bharam to rakh le. .. . .
mein ne logon ko, tujhe apna bta rakha hai

 

 

مدت ہوئی آنکھوں نے وہ منظر نہیں دیکھا
اک چاند نکلتا تھا کبھی شام سے پہلے،

muddat hui aankhon ne woh manzar nahi dekha
ik chaand nikalta tha kabhi shaam se pehlay ,

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad

ہماری نیند پوری نہ خواب پورے ہیں
ادھورے لوگ ہیں لیکن عذاب پورے ہیں

hamari neend poori nah khawab poooray hain
adhooray log hain lekin azaab poooray hain

 

 

کہاں ہے،کیسے ہے،کیوں ہے،اگر،مگر،شاید
تمہارے پاس تو سارے جواب پورے ہیں

kahan hai, kaisay hai, kyun hai, agar, magar, shayad
tumahray paas to saaray jawab poooray hain

 

 

Sher o Shayari in Urdu Sad || Ghamzada Shero Shayari

مت ٹٹولا کیجئے میرے لفظوں سے میری ذات
اپنی ہر تحریر کا عنوان نہیں ہوں میں
mat tatola kijiyej mere lafzon se meri zaat
apni har tehreer ka unwan nahi hon mein

 

کبھی فرصت ملے تو پڑھنا ضرور
میرے ہر شعر میں حوالا تھمارا ہیں
kabhi fursat miley to parhna zaroor
mere har shair mein hawala thumara hain

Leave a Reply

Your email address will not be published.